یونیورسٹی کورونا وائرس کی وبا میں امتحان منسوخ کرے ، آن لائن امتحانات میں طلباءکے ساتھ ناانصافی: آصف

نئی دہلی09جولائی sm-asif-pic12020
آل انڈیا مائنارٹیز فرنٹ کے قومی صدر ایس ایم آصف نے کہا کہ اس وبا کے پیش نظر چودھری چرن سنگھ یونیورسٹی ، میرٹھ کو اپنے طلباءکو ریلیف فراہم کرنا چاہئے اور ان کے سمسٹر امتحانات کو منسوخ کرنا چاہئے اور اگلے سیشن میں پروموٹ پاس کرنا چاہئے۔ انہوں نے کہا کہ طلبا پہلے ہی کورونا کی وجہ سے پریشانی میں مبتلا ہیں۔ پہلے سے ہی خراب تعلیم کے نظام میں کورونا کی وجہ سے مزید مشکلات کا سامنا کرنا پڑا ہے۔ سیشنز فاسد ، اندراج ، وغیرہ بن چکے ہیں ، نظام خراب ہوچکا ہے ، مطالعات بند ہیں ، ایسی صورتحال میں حکومت اور یونیورسٹی انتظامیہ کا یہ رویہ غیر منصفانہ اور ناقابل عمل ہے۔ اگر انتظامیہ اپنے فیصلے کو تبدیل نہیں کرتی ہے تو پھر ناراض طلباءاس ماحول میں بھی مشتعل ہوسکتے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ دہلی یونیورسٹی آن لائن کے انعقاد کا بھی ارادہ رکھتی ہے جو بالکل مناسب نہیں ہے۔ کیونکہ یہ طلباءکے مستقبل کے ساتھ کھیلا جارہا ہے۔ ہر کوئی آن لائن امتحان نہیں دے سکتا ہے کیونکہ اس کے لئے لیپ ٹاپ یا اسمارٹ فون کی ضرورت ہوگی۔ مالی طور پر پسماندہ طلبا کو یہ سہولت میسر نہیں اورحال یہ بھی ہے کہ انٹرنیٹ ہر جگہ ٹھیک سے کام نہیں کرتا ہے۔ آصف نے کہا کہ حکومت پچھلے سمسٹر کے اوسط نمبر پر ایل ایل بی ، بیکوم ایل ایل بی ، بی سی کوم ، بی اے ، بی اے ایل ایل بی اور دیگر کورسز کے پہلے اور دوسرے سال کے طلباءکے ایوریج نمبر پر لگا سکتی ہے یا مستقبل میں آنے والے سمسٹر جوطلباءدیںگے اس کے ایوریج پر بھی مارکس لگا سکتی ہے

Comment is closed.