بیلگام میں آل انڈیا مائنارٹیزفرنٹ کے بھاٹیا بنے امیدوار

کرناٹک کے پارلیمانی ضمنی انتخابات میں بھاٹیا میدان میں

karنئی دہلی27مارچ
آل انڈیا مائنارٹیزفرنٹ نے کرناٹک میں بیلگام پارلیمانی ضمنی انتخاب کے لئے نامور سماجی کارکن اونکار سنگھ بھاٹیا کو اپنی پارٹی کا امیدوار نامزد کیا ہے۔

مائنارٹیزفرنٹ کے نوجوان محاذ کی چیئرمین لبنیٰ آصف نے ہفتہ کو پارٹی کا ٹکٹ دے کر بھاٹیا کے امیدوار ہونے کا اعلان کیا۔

جناب اونکار سنگھ بھاٹیا کرناٹک کے ایک مشہور کاروباری شخصیت کے ساتھ ایک سماجی کارکن ہیں۔ ریاست کے سکھ پنگتوں کے ساتھ ساتھ دیگر اقلیتی تنظیموں کے ساتھ بھی ان کی حمایت کا وعدہ کیا گیا ہے۔ بھاٹیا نے کہا کہ ہم ہندوستان کو تبدیل کرنے اور موجودہ حکمرانی کو چیلنج کرنے کے لئے انتخابات لڑ رہے ہیں۔ موجودہ حکومت نے عوام کی بے پناہ حمایت سے سب کا ساتھ ، سب کا وکاس کے منتر کو تبدیل کردیا ہے۔ لبنیٰ آصف نے کہا کہ اس عرصہ میں کسانوں اور مزدوروں کے حقوق پامال ہوئے ہیں جیسا پہلے کبھی نہیں ہوا۔ بھاٹیا جی کی فتح مظلوموں کی فتح ہوگی۔

بیلگام پارلیمانی حلقہ 23 ستمبر 2020 کو سابق مرکزی وزیر سریش انگادی کی موت کے بعد خالی ہے۔ ضمنی انتخاب کا پورا عمل 23 مارچ 2021 تک مکمل ہونا تھا۔ ضمنی انتخاب کے لئے الیکشن کمیشن کی جانب سے نامزدگی کا آخری دن 30 مارچ 2021 ہے

Comment is closed.